ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان خدمت خلق کا استعارہ

Spread the love

ان سائیڈ اسٹوری : کسی کے گھر کی حرمت پامال کرنا اور منفی و بلا تحقیق پراپیگنڈا کرنا جرم ہے۔ یوٹوبرز کا مسئلہ یہی ہے کہ وہ چند لاٸکس اور کمنٹس کے لٸے بلا تحقیق کچھ بھی چلا دیتے ہیں۔ حقیقت یہ ہے کہ  ڈاکٹر فردوس عاشق کی رہائش گاہ کوبے چک والا تھر گھر انیس سو چونسٹھ میں ڈاکٹر فردوس صاحبہ کے والد صاحب ملک حاجی عاشق حسین اعوان مرحوم جو اپنے علاقے کی نامور شخصیت اور متمول و خوشحال زمیندار ہونے کے ساتھ ساتھ ایک سوشل ورکر اور انسانیت سے پیار کرنے والے انسان تھے جہوں نے ہمیشہ لوگوں کی فلاح و بہبود کو ہر چیز پر ترجیح دی یہی وجہ ہے کہ لوگ آج بھی ان کے نام کے گن گاتے ہیں نے اپنی گرہ سے تعمیر کیا جو اس وقت کے ڈھاٸی تین سو دیہاتوں میں اکلوتا پکی اینٹوں کا بنا گھر تھا۔

اس گھر میں پچاسی سے زاٸد گاوں کے لوگوں کی پنچاٸتیں بیٹھا کرتی تھیں اور حق سچ کے فیصلے ہوا کرتے تھے۔ اس گھر میں انیس سو پینسٹھ اور انیس سو اکہتر کی جنگیں لڑی گٸیں ہیں۔ یہ گھر ڈاکٹر فردوس عاشق کی پیداٸش سے بھی پہلے کی تعمیر ہے۔

یہ ان کا آباٸی گھر ہے جس میں سب بہن بھاٸی اکٹھے رہتے ہیں۔ ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان کی وارثتی جاٸیداد میں تین سے زاٸد دیہات آتے تھے جو اس وقت اربوں کی جاٸیداد تھی جو سب بہن بھاٸیوں میں تقسیم ہوٸی۔ ڈاکٹر فردوس عاشق نے اپنی زمینیں بیچ کر اپنی سیاست پہ اخراجات کٸے ہیں۔ اپنی وارثتی جاٸیداد بیچ کر سیاست پہ خرچ کیا ہے یہاں سے کچھ کمایا نہیں ہے بلکہ یہاں لگایا ہی ہے۔ ہاں اگر ڈاکٹر فردوس عاشق کی سیاست کا احوال جاننا ہے تو سید پور روڈ پہ سفر کریں جو شہر سے لے کر بارڈر تک پکی کارپٹڈ روڈ ہے اور ان کی خدامات کا منہ بولتا ثبوت ہے اس کے علاوہ متعدد سکول کالجز ۔چار وویمن ڈگری کالجز۔ سول ہسپتال۔سپورٹس کمپلیکس۔ نادرا آفس پاسپورٹ آفس۔ بارڈر تک تمام دیہاتوں میں سوٸی گیس کی فراہمی۔ تمام دیہاتوں میں ہر گھر تک بجلی کی سپلاٸی۔ ماڈل قبرستان ۔ ڈویڑنل پبلک سکول۔ ون ون ٹو ٹو ایمرجنسی سروس۔ رفاعی ہسپتال اور دیگر کٸی عوامی فلاحی منصوبے اس بات کی گواہ ہیں کہ ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان بنیادی طور پر سیاستدان کی بجاٸے ایک سوشل ورکر ہے جس نے سیاست سے اپنا گھر نہیں بھرا بلکہ اپنے دو قومی حلقوں کی عوام کو خوشحال اور آسودہ رکھنے کے لٸے تمام بنیادی ضروری سہولتیں پہنچاٸیں ہیں۔ ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان صاحبہ کا عزم ہے کہ جہالت کو ختم کرنے اور تبدیلی کے سفر کے لٸے تعلیم بہترین اور موثر ذریعہ ہے اور علم کی روشنی سے جہالت کے اندھیروں کو دور کیا۔ ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان ایک بے داغ کردار کی مالک سیاسی و سناجی شخصیت ہیں جن کی زندگی کا مقصد لوگوں کی فلاح و بہبود اور علاقے کی تعمیر و ترقی کے ساتھ ساتھ بہتری کرنا ہے۔ عشروں اور دہاٸیوں سے ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان اپنی خدمات کے ذریعے لوگوں کے لٸے فلاح اور آسودگی کا باعث ہیں جنہوں نے پسماندہ دیہاتوں کو شہری سطح کی تمام سہولتوں سے آراستہ کر رکھا ہے۔ ہاتھ کنگن کو عار سی کیا۔ جگہ جگہ تعمر پراجیکٹس ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان کی ۔انسان دوست اور عوامی فلاحی سیاست کا منہ بولتا ثبوت ہیں.

 

جس ویڈیو کو لیکر سوشل میڈیا پر منفی پروپیگنڈا کیا جا رہا ہے اور ایک مخصوص جماعت سے وابستہ ٹرولرز اسکی ٹرولنگ کر رہے ہیں وہ اصل ویڈیو دیکھ لیں۔ تاکہ انکو کچھ شرمندگی ہو اور وہ منفی ٹرولنگ پر کچھ شرمندگی محسوس کریں۔

https://www.facebook.com/61550326380829/videos/572136134930137/?extid=CL-UNK-UNK-UNK-IOS_GK0T-GK1C&mibextid=2Rb1fB

ٹرولرز کو تو بلکہ یہ حقائق مثبت انداز میں لینے چاہئیے تھے ۔ بڑے بڑے جاگیر داروں،سیاستدانوں ،ججز ،جنرلز اور بیوروکریٹس کے محل نما گھر کیا ہوتے ہیں ؟ اور وہاں پر جو انٹیکس رکھی گئی ہوتی ہیں اس سے ہٹ کر ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان اور انکا خاندان ایک دیندار روایات کا امین ہے۔ 

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

*